جسٹس چوہدری

 
غالباً اسی کی دہائی میں انڈیا میں ایک فلم بنی تھی “جسٹس چوہدری“ جس میں جسٹس چوہدری کا کردار اس وقت کے معروف اداکار جتندر نے کیا تھا ، اس فلم کی کہانی ایک ایماندار اور کڑک قسم کے جج اور اسکے بیٹے کے درمیان ہونے والے واقعیات پر مشتمل تھی ، آج اپنے پاکستان نے “جسٹس چوہدری“ کی ریفرنس والی بات سن کر جانے کیوں وہ فلم یاد آ گئی ، اور ذھن کے پردے پر اسکے گانے چلنے لگے جس میں جتندر کی جگہ افتخار صاحب تھے اور ولن (شکتی کپور) کی جگہ مشرف صاحب اور ہیروین سری دیوی کی جگہ عدلیہ خود ہی بن گئی  ۔۔  اب دیکھا تو پتہ چلا کہ ولن نے ہیروین کو اغوا کر لیا ہے ، اور ہیرو صاحب نظر بند ۔ ۔ ۔  اب سب کی اپنی اپنی فلم چل رہی ہے ، اس فلم کے کچھ گیت تو بہت مشہور تھے  ۔۔  جیسے
زندگی کی سب سے بڑی دولت ہے کیا ، اقتدار تیرا
ایماں کی کتابوں سے بڑھ کر ہے کیا ، آئین یار میرا
مسیحا سے بھی اچھا ہو گا نہ کون ، بیمار تیرا
وردی انمول  ۔ ۔ ۔ ۔ ۔  ۔۔
 
 
اور جب ہیرو اور ہیروئن کی ملاقات ہوتی ہے تو وہ گاتے ہیں  ۔
۔
مجھے کیا ہوا ، کیا پتہ
میں نے تجھے چھواء تو  ۔  ۔ وہ ہوا
آگ جو لگی ہے وہ کیسے بھجھے گی
جتنی بجھاؤ گے اور لگے گی  ۔ ۔ ۔
 
 
اور دوسرا گیت بھی بہت مشہور تھا
ماما میا ۔ ۔ پوم پوم  ۔ ۔ ۔
صدر کی گاڑی ، تیز بھگاؤ
ایکسیلٹر اور دباؤ
سفر بڑا ہی پیارا ہم دم
لاکھوں ارماں وقت بہت کم
اسٹاپ  ۔ ۔ ۔۔
اور پھر جب جج صاحب کو برطرف کر دیا جاتا ھے (فلم میں ) تو وہ یہ گیت گاتے ہیں
 
انصاف کی کرسی پہ خود کو بٹھاؤ
میں نے غلط کیا کیا ہے مجھے یہ بتاؤ (ہاں جی ذرا دسو تے سہی)
اور ولن صاحب فرماتے ہیں  ۔ ۔ ۔
یہ میرا نہیں انصاف کافیصلہ ہے
انصاف کا فیصلہ  ۔ ۔ ۔
صدر صاب کا فیصلہ !!!!!!
اور پھر فلم چلتی رہتی ہے  ۔ ۔ ۔ جیسے اب بھی چلتی رہے گی  ۔ ۔ ۔ اور سب لوگ ملکر  گاتے رہیں گے
 
اپنا یہ وعدہ ہے  ۔ ۔
نیک ارادہ ہے  ۔ ۔ ۔
دیکھیں گے دکھائیں گے
اور چُپ ہو جائیں گے
ہم لوگوں نے کرنا ہے اور کیا  ۔ ۔کیا کیا کیا  (یہ ایکو ہے )
ترا پا رم پم ترا پررم پم  ۔ ۔  ۔۔
 
ایک بات اور مزے کی بتاؤں کہ اس میں ہیرو (جتندر) خود ہی اپنے باپ بھی تھے اور بیٹے بھی  ۔ ۔ ۔ (یعنی ڈبل پارٹ تھا ) اب یہ
سمجھ نہیں آتا کہ یہ ڈبل پارٹ ہیرو کر رہا ہے یا ولن !!!!!!
 
 
 
 
Advertisements

3 responses to this post.

  1. Posted by Iftikhar Ajmal on مارچ 10, 2007 at 10:26 صبح

    صاحب بہادر یہ تو میں نے صبح ہی پڑھ لیا تھا لیکن تبصرہ نہیں کیا کہ ایسی کوئی بات سمجھ میں نہیں آئی۔

    جواب دیں

  2. Posted by Sayyeda on مارچ 10, 2007 at 12:28 شام

    اسلام و علیکمجسٹس صاحب کی غلطی صرف یہ تھی کہ وہ غلط ملک میں پیدا ہو گئے۔ نواز شریف نے جسٹس سجاد حسین شاہ کو برطرف کر کے اپنے تابوت میں آخری کیل ٹھونکی تھی، اور اب پرویز مشرف کی یہ حرکت انشاءاللہ ان کے حکومتی تابوت میں آخری کیل ثابت ہوگی۔فی امان اللہ
     
     
    P.S= Thanks for link my blog on your space.

    جواب دیں

  3. Posted by Sayyeda on مارچ 10, 2007 at 12:28 شام

    اسلام و علیکمجسٹس صاحب کی غلطی صرف یہ تھی کہ وہ غلط ملک میں پیدا ہو گئے۔ نواز شریف نے جسٹس سجاد حسین شاہ کو برطرف کر کے اپنے تابوت میں آخری کیل ٹھونکی تھی، اور اب پرویز مشرف کی یہ حرکت انشاءاللہ ان کے حکومتی تابوت میں آخری کیل ثابت ہوگی۔فی امان اللہ
     
     
    P.S= Thanks for link my blog on your space.

    جواب دیں

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: